سندھ میں سرکاری گاڑیاں خریدنے پر3 سال کیلئے پابندی

سندھ حکومت بھی وفاق کے نقش قدم پر چل پڑی۔ نئی سرکاری گاڑیاں خریدنے پرتین سال کےلئے پابندی عائد کر دی گٗئی۔ گاڑیاں افسران کو لیزپردی جائیں گی۔ گورنر، وزیراعلیٰ، چیف جسٹس سمیت دیگر اہم شخصیات کیلئے بلٹ پروف گاڑیوں کے استعمال کی منظوری دی گٗئی۔ پلاسٹگ کی تھیلیوں پر پابندی سمیت سندھ کابینہ کے اجلاس میں دیگراہم فیصلے بھی کیے گئے۔

وزیر اعلیٰ سندھ مراد علی شاہ کی زیر صدارت اجلاس میں پولیس میں تقرریوں تبادلوں سے متعلق کمیٹی قائم کرنے کے علاوہ نئی گاڑیوں کی خریداری پر تین سال کے لئے پابندی لگادی گئی۔ سندھ کابینہ نےگورنر، وزیراعلیٰ، چیف جسٹس، چیف سیکریٹری، وزیر داخلہ، آئی جی پولیس، دو ایڈیشنل آئی جیز کو بلٹ پروف گاڑیاں استعمال کرنے کی منظوری بھی دی۔

سندھ کابینہ نے پولیس میں تقرریوں اور تبادلوں کے ڈرافٹ کو دیکھنے کے لیے کمیٹی قائم کر دی گئی جس میں مشیر قانون، منسٹر انرجی، ہوم سیکریٹری اور آئی جی پولیس شامل ہیں۔ اجلاس میں آئی جی جیل خانہ جات اور ڈی آئی جی جیل کی تقرری سے متعلق 1978 کا رول بحال کردیا جس کے تحت ڈی آئی جی جیل کو ہی آئی جی جیل خانہ جات پر ترقی دی جائے گی۔

سندھ کابینہ نےگورنر، وزیر اعلیٰ، چیف جسٹس، چیف سیکریٹری، وزیر داخلہ، آئی جی پولیس، دو ایڈیشنل آئی جیز کو بلٹ پروف گاڑیاں استعمال کرنے کی منظوری بھی دی، سیکیورٹی خدشات کے پیش نظر وزیر یا افسر کو کابینہ کی منظوری سے بلٹ پروف گاڑی دی جائے گی،

اجلاس میں نئی گاڑیوں کی خریداری پر تین سال کے لئے پابندی عائد کردی گئی۔ وزیراعلیٰ سندھ کا کہنا ہے کہ گریڈ سترہ کے افسر کو لیز پر گاڑی دی جائے گی ۔ جب قسطیں پوری ہوں گی تو گاڑی افسر کے نام ہو جائے گی جبکہ گاڑی کی مرمت کے اخراجات بھی افسر خود پورے کرےگا۔

سندھ کابینہ اجلاس میں شدید بیمار یا عمر رسیدہ قیدیوں کے مسائل پر بھی بات چیت ہوئی، کمیٹی کی جانب سے 27 میں سے 12 معمر قیدیوں کی رہائی کی سفارشات کومنظور کرلیا گیا۔

سندھ کابینہ نے پلاسٹک اور پولی بیگ پر پابندی کی منظوری بھی دی۔ پہلے مرحلے میں سکھر، پھر کراچی اور حیدرآباد میں پابندی عائد جائے گی۔ وزیراعلیٰ سندھ کے مطابق پابندی پر 3 ماہ میں عمل درآمد کیا جائے گا

آپ کیلئے تجویز کردہ خبریں‎‎

?>