پولیس افسرطاہرخان داوڑ دراصل کون تھے جان کر آپ بھی فخرمحسوس کریں گے

دہشت گردی کا نشانہ بننے والے ایس پی طاہرخان داوڑ کا شمار پنجاب پولیس کے بہادر افسران میں ہوتا تھا اے ایس آئی کے عہدے سے پنجاب پولیس میں شامل ہونے والے  طاہرخان داوڑ اپنی صلاحیتوں کی وجہ سے ایس پی کے عہدے تک جا پہنچے.

انہوں نے 2009 ء سے 2012 ء تک ایف آئی اے میں اسسٹنٹ ڈائریکٹر کے طور پر کام کیا. اس کے بعد پشاور میں ڈی ایس پی بھی رہے .طاہر داوڑ 2003ء میں اقوام متحدہ کے امن مشن پر مراکش اور 2005 ء میں سوڈان میں تعینات رہے. 2005 ء میں دہشت گردوں کے ساتھ پولیس مقابلہ میں ان کے بازو اور ٹانگ میں گولیاں لگیں .

ان کو قائد اعظم پولیس ایوارڈ سے بھی نوازا گیا.

ایس پی طاہر داوڑ کے دوستوں کا بھی کہنا ہے کہ وہ ایک قابل فرض شناس اور با اخلاق انسان تھے

ایس پی طاہر داوڑ کا ادب کی طرف بھی رجحان پایا جاتا تھا وہ پشتو زبان میں شاعری بھی کیا کرتے تھے.

ان کی لاش دو روز قبل افغانستان کے صوبہ ننگرہا ر سے ملی۔ایس پی طاہر داوڑ کی میت آج پاکستان کے حوالے کیے جانے کا امکان ہے۔

آپ کیلئے تجویز کردہ خبریں‎‎