جنوبی پنجاب صوبے کا قیام آسان کام نہیں: صدر مملکت

صدر مملکت عارف علوی کی کراچی میں پریس کانفرنس: ویڈیو اسکرین گریب


پشاور: صدر مملکت عارف علوی نے کہا ہےکہ جنوبی پنجاب صوبے کا قیام آسان کام نہیں ہے۔

پشاور میں گورنر خیبرپختونخوا کے ہمراہ پریس کانفرنس کرتے ہوئے صدر مملکت عارف علوی نے کہا کہ فاٹا کا انضمام ہوچکا ہے، وہاں کے مسائل کو مسلسل دیکھنا پڑے گا، فاٹا کے اضلاع میں آئینی طور پر 25 جولائی تک صوبائی اسمبلی کے انتخابات ہونے چاہئیں، فاٹا کی تعمیر نو میں دس سال میں ایک ہزار ارب روپے خرچ کرنےکاپروگرام ہے، لیویز اور خاصہ دار فورس کا کوئی اہلکاربے روزگار نہیں ہوگا، مزید 30 ہزار لوگوں کو روزگار دیا جائے گا۔

صدر مملکت کا کہنا تھاکہ جنوبی پنجاب صوبہ آسان کام نہیں، وہاں مشکلات ہیں، اثاثوں کو تقسیم کرنا، پانی کے حصے کا تعین کرنا سمیت دیگر مشکلات ہیں، مسائل کاسامنا ہے لیکن مسائل جلد حل ہوجائیں گے۔

انہوں نے مزید کہا کہ گلگت بلتستان اور ناران میں احساس ہوا کہ اگر بغیر منصوبے کے تعمیرات ہوں گی توخوبصورتی ماند پڑ جائے گی، بے ہنگم تعمیرات نے مری کو تباہ کیا ، قدرتی ماحول متاثر کیے بغیر سیاحت کے فروغ کی کوششیں کریں گے۔

صدر مملکت کا کہنا تھا کہ لاپتا افراد کے واقعات نہیں ہونے چاہئیں، اس پر بہت توجہ کی ضرورت ہے۔

وزیراعظم کی تقریر سے متعلق انہوں نے کہا کہ دیسی مرغیوں اور انڈوں کا مشورہ میں نے نہیں دیا، حکومت اور وزیراعظم سے گزارش کی ہے کہ اپنا کام کرتے رہیں، ردعمل نہ کریں بلکہ اپنے کام سے اپنے راستے کا تعین کریں۔



آپ کیلئے تجویز کردہ خبریں‎‎