گھانا میں یونیورسٹی سے مہاتما گاندھی کا مجسمہ ہٹا دیا گیا

گھانا کی ایک یونیورسٹی میں بھارت کی تحریک آزادی کے رہنما مہاتما گاندھی کے مجسمے کو نسل پرستانہ قرار دے کر ہٹا دیا گیا۔


برطانوی نشریاتی ادارے کے مطابق گھانا یونیورسٹی میں 2016ءمیں نصب کیے جانے والے اس مجسمے کے خلاف قراداد پیش کی گئی جس میں کہا گیا کہ گاندھی ’نسل پرست‘ تھے اور ان کی جگہ کسی افریقی ہیرو کا مجسمہ ہونا چاہیے۔

یونیورسٹی کے لیکچررز اور طلبہ نے بتایا کہ اس مجسمے کو گزشتہ روز ہٹایا گیا ہے۔



آپ کیلئے تجویز کردہ خبریں‎‎