’ساری غلطی میری تھی، اسی کی سزا ملی‘

بالی ووڈ فلموں کی طرح لڑکی کی خاطر پاکستان آنے والے اور جاسوسی کے الزام میں چھ سال سزا کاٹنے والے بھارتی انجینئر حامد نہال انصاری وطن لوٹ گئے۔ انہوں نے اپنی نادانی میں کی گئی غلطی مانتے ہوئے کہا کہ ’ ساری غلطی میری تھی اوراسی کی سزا مجھےملی۔‘


بھارتی میڈیا کو انٹرویو دیتے ہوئے حامد نہال انصاری کا کہنا تھا کہ ’میں اپنے لوگوں میں واپس آگیا ہوں، اپنی واپسی پر بے انتہا محبت ملی جس کی مجھے توقع نہیں تھی۔میں بارڈر کی دونوں جانب ان لوگوں کا شکر گزار ہوں جنہوں نے رہائی میں میری مدد کی۔‘

انہوں نے کہا کہ ’میں کسی بھی شخص کو قصور وار نہیں ٹھہراؤں گا کیونکہ ساری غلطی میری ہے۔ میں پاکستان کسی غلط مقصد کے لئے نہیں گیا تھا، بس میں نے غلط قدم اٹھایا جس کی قیمت مجھے ادا کرنی پڑی۔‘

2012 میں لاپتہ ہونے والے انجینئر نے کہا کہ ’میں نے ایک لڑکی کو جبری شادی سے بچانے کے لئے بارڈر کراس کیا تھا اور پاکستانی فوج ہاتھوں گرفتار ہو گیا جس کے بعد مجھے جیل بھیج دیا گیا۔‘



آپ کیلئے تجویز کردہ خبریں‎‎