پاکستان میں انٹرنیشنل کرکٹ کی واپسیک، آسٹریلوی کھلاڑی بھی سرگرم

پاکستان میں انٹرنیشنل کرکٹ کی واپسی کے لئے آسٹریلوی کپتان ایرون فنچ اور عثمان خواجہ بھی میدان میں آگئے ، ایک بیان میں آسٹریلوی کپتان کا کہنا ہے کہ پاکستان میں کرکٹ کا بڑاشوق ہے ، وہاں کے میدانوں کو آباد ہونا چاہئے۔


آسٹریلین کپتان ایرون فنچ اور اوپنرعثمان خواجہ دونوں ہی پاکستان میں انٹرنیشنل کرکٹ کی مستقل بحالی کے لئے سنجیدہ ہیں، ایرون فنچ کا کہنا تھا کہ پاکستان میں کرکٹ شائقین کی بڑی تعداد اسٹیڈیم کا رخ کرتی ہے ،پاکستانی عوام میں کھیلوں کا شوق ہے ، اس ملک میں انٹر نیشنل کرکٹ کی واپسی مستقل بنیادوں پر ہونی چاہیے ۔

لیکن ابھی وہاں کھیلنا ہے یا نہیں ،یہ فیصلہ کرکٹ بورڈ کرے گا،اوپنر عثمان خواجہ کا کہنا تھا کہ 2009 سے پاکستان میں انٹرنیشنل کرکٹ مستقل نہیں ہو رہی ہے، وہ پاکستان میں پیدا ہوئے ، وہاں کرکٹ کھیلنا ایک بڑا فیصلہ ہوگا، دوسری جانب پاکستان میں آسٹریلین کرکٹ ٹیم کے میچز کھیلنے نہ کھیلنے کا جائزہ لینے کےلئےآسٹریلین فارن منسٹری اور کرکٹ آسٹریلیا کے درمیان جلد مشاورت ہوگی۔

پاکستان میں ون ڈے انٹرنیشنل کھیلنے کے لیے آسٹریلوی کھلاڑی پرجوش ہیں ، کپتان ایرون فنچ کہتےہیں پاکستان میں انٹرنیشنل کرکٹ کی واپسی خوش آئند ہوگی ، تماشائی بڑی تعداد میں اسٹیڈيم آتےہیں ۔ آسٹریلوی کپتان ایرون فنچ کہتے ہیں کہ پاکستان میں کرکٹ شائقین کی بڑی تعداد اسٹیڈیم کا رخ کرتے ہیں۔تاہم یہ درست وقت ہے یا نہیں اس بات کا فیصلہ کرکٹ آسٹریلیا کو کرنا ہے۔

دریں اثنا آسٹریلوی ڈپارٹمنٹ آف فارن افیئرز نے کرکٹ آسٹریلیا کے دورہ پاکستان پرمشاورت کی ہدایت ہے، اور کہا کہ دورہ پاکستان کے فیصلے کا بغور جائزہ لیا جائے۔



آپ کیلئے تجویز کردہ خبریں‎‎