چینی قونصل خانہ حملہ، ملزمان کا نئے مقدمات میں ریمانڈ

کراچی میں چینی قونصل خانے پر دہشت گرد حملے میں ہلاک ملزمان کے ساتھی اور سہولت کار ہونے کے الزام میں گرفتار 5 ملزمان کا پولیس نے چینی قونصل خانے پر حملے کے مقدمے میں ریمانڈ ہی نہیں لیا بلکہ ان کے خلاف درج 5 نئی ایف آئی آرز کے تحت 5 روزہ ریمانڈ حاصل کرلیا ہے۔


پانچوں ملزمان کی گرفتاری اور اسلحہ برآمدگی کے تمام نئے مقدمات ایس ایس پی ملیر عرفان بہادر کے دفتر میں تعینات انسپکٹر خرم وارث کی مدعیت میں گلشن نے معمار تھانے میں درج کیے گئے ہیں جن میں دہشت گردی اور دیگر دفعات عائد کی گئی ہیں۔

کراچی کے چینی قونصلیٹ پر 23 نومبر کو حملہ کیا گیا تھا جس میں وہاں تعینات 2 پولیس اہلکاروں اور باپ بیٹے سمیت 4 افراد شہید جبکہ جوابی کارروائی میں 3 دہشت گرد ہلاک ہوگئے تھے۔

کراچی پولیس چیف ڈاکٹر امیر احمد شیخ نے گذشتہ روز ایک میڈیا بریفنگ میں دہشت گردی کی اس واردات کے حوالے سے تمام تفصیلات سے شہریوں کو آگاہ کیا۔

کراچی پولیس چیف نے بریفنگ کے دوران 5 ملزمان کی گرفتاری ظاہر کی تھی جن کے قبضے سے بھاری اسلحہ اور گولہ بارود بھی برآمد ہوا۔

ان ملزمان کی گرفتاری اور اسلحہ برآمدگی کے مقدمات کے مطابق ملزمان کو تیسر ٹاون نزد بلوچ گوٹھ خالی پلاٹ سے گرفتار کیا گیا، ایف آئی آر کے مطابق ملزمان احمد حسنین، نادر خان عرف عارف بلیدی، علی احمد، عبدالطیف اور اسلم گرفتار سے قبل کراچی میں مزید دہشتگردی کیلئے موجود تھے۔

ملزمان کے قبضے سے بھاری تعداد میں اسلحہ اور لانچ کے گئیربکس کا حصہ برآمد ہوا تھا۔ پولیس کے دعوے کے مطابق لانچ کے گیربکس میں اسلحہ چھپا کر اسے ریل گاڑی کے ذریعے کوئٹہ سے کراچی منتقل کیا گیا تھا۔

ایڈیشنل آئی جی کراچی ڈاکٹر امیر احمد شیخ نے پریس بریفنگ کے دوران ملزمان کو چینی قونصل خانے پر حملے میں ملوث ہلاک 3 دہشت گردوں کے ساتھی اور سہولت کار بتایا تھا لیکن پولیس نے انسداد دہشت گردی کی عدالت سے قونصل خانے پر حملے کے مقدمے میں ملزمان کا ریمانڈ مانگا ہی نہیں بلکہ ان کے خلاف درج پانچ نئے مقدمات میں انسداد دہشت گردی کی عدالت سے 14 دن کا ریمانڈ دینے کی استدعا کی تھی۔

انسداد دہشت گردی کی عدالت کے منتظم جج نے پانچ روزہ ریمانڈ پر ملزمان کو ملیر پولیس کے حوالے کردیا۔

چینی قونصل خانے کے حملے کے مقدمے میں ریمانڈ نہ لینے کو پولیس حکام نے قانونی پیچیدگی ظاہر کیا ہے۔

ایک تفتیشی افسر نے بتایا کہ عدالت سے ملنے والے ریمانڈ کی حالیہ مدت کے دوران ملزمان سے سی ٹی ڈی وی تفتیش کرے گی جس کے بعد ملزمان کا چینی کونسل خانے کے مقدمے میں بھی ریمانڈ لیا جائے گا۔



آپ کیلئے تجویز کردہ خبریں‎‎