پاکستانی بیٹنگ لائن کی پرانی کہانی، ٹیم 185 پر ڈھیر

جنوبی افریقا کیخلاف تیسرے ٹیسٹ کی پہلی اننگز میں بھی پاکستانی بیٹنگ لائن نے سابقہ روایت برقرار رکھی اور محض 185 رنز پر پوری ٹیم پویلین لوٹ گئی، سرفراز احمد 50 رنز کے ساتھ ٹاپ اسکورر رہے، پروٹیز کو 77 رنز کی برتری حاصل ہوگئی۔


جوہانسبرگ ٹیسٹ میں جنوبی افریقا کے 262 رنز کے جواب میں پہلے دن پاکستان ٹیم محض 6 رنز دو وکٹیں گر گئی تھیں، جس کے بعد کپتان نے محمد عباس کو نائٹ واچ میچ کے طور پر بیٹنگ کیلئے بھیجا، قومی ٹیم نے کھیل ختم ہونے تک 17 رنز پر 2 کھلاڑی آؤٹ تھے۔

دوسرے دن پاکستانی بیٹنگ کو امام الحق، بابر اعظم اور سرفراز احمد نے کچھ سہارا دیا، اوپنر 43، مڈل آرڈر بیٹسمین 49 اور کپتان 50 رنز بناکر آؤٹ ہوئے۔

اظہر علی، اسد شفیق اور فہیم اشرف صفر پر وکٹیں گنواگئے، شان مسعود 2، محمد عباس 11، شاداب خان 5 اور محمد عامر 10 رنز بنا کر آؤٹ ہوئے، حسن علی 0 پر ناٹ آؤٹ رہے۔

پاکستان ٹیم سنچورین اور کیپ ٹاؤن ٹیسٹ میں شکست کھاچکی ہے، جنوبی افریقا کو سیریز میں 0-2 کی فیصلہ کن برتری حاصل ہے، قومی ٹیم کو وائٹ واش سے بچنے کیلئے کھیل کے تمام شعبوں میں جان لڑانی پڑے گی۔



آپ کیلئے تجویز کردہ خبریں‎‎