ان کا نام مُفتہ نہیں مِفتاح اسماعیل ہے

اسلام آباد میں سابق وزیراعظم شاہد خاقان عباسی کی پریس کانفرنس کے دوران اس وقت قہقہے بلند ہوگئے جبکہ خاقان عباسی نے کہا کہ ’ان کا نام مُفتہ اسماعیل نہیں بلکہ مفتاح اسماعیل ہے۔


یہ صورت حال اس وقت پیدا ہوئی جب سابق وزیراعظم کی پریس کانفرنس کے آخر میں صحافیوں نے سوالات شروع کیے۔ متعدد صحافیوں نے سابق وزیراعظم سے سیاسی اور معاشی صورت حال کے بارے میں سوالات کیے جن کا انہوں نے خندہ پیشانی سے جواب دیا۔

اس دوران پچھلی نشستوں پر بیٹھے ایک صحافی نے مفتاح اسماعیل کے بارے میں سوال کرتے ہوئے ان کا نام ’مُفتہ اسماعیل‘ کہا۔ یہ واضح نہیں کہ صحافی نے جان بوجھ کر ایسا کیا یا ان کی زبان پھسل گئی یا پھر کم علمی کی بنیاد پر وہ مفتاح کی ’میم‘ کو پیش کے ساتھ پڑھتے رہے۔

شاہد خاقان عباسی نے سوال کا جواب دینے سے پہلے نام کی وضاحت کرتے ہوئے کہا کہ ’ ان کا نام ’مُفتہ اسماعیل نہیں بلکہ مفتاح اسماعیل ہے۔‘ سابق وزیراعظم کے اس جواب پر محفل کشت زعفران بن گئی اور صحافیوں سمیت حال میں موجود تمام شرکاء کے قہقہے بلند ہوگئے۔

مفتاح اسماعیل کو نام ’میم‘ کے نیچے زیر کے ساتھ پڑھا جاتا ہے۔



آپ کیلئے تجویز کردہ خبریں‎‎