جوہانسبرگ ٹیسٹ کا دوسرا دن ختم، جنوبی افریقا کو 212 رنز کی برتری

جوہانسبرگ: (ویب ڈیسک)‌ جوہانسبرگ ٹیسٹ میں بھی جنوبی افریقا کی میچ پر گرفت مضبوط ہونے لگی. ٹیسٹ کے دوسرے روز جنوبی افریقا نے اپنی دوسری اننگز میں 5 وکٹوں کے نقصان پر 135 رنز بنا لیے ہیں اور پاکستان کے خلاف میزبان ٹیم کی مجموعی برتری 212 رنز تک پہنچ گئی ہے۔


جوہانسبرگ میں کھیلے جارہے آخری ٹیسٹ میں بھی پاکستان کی بیٹنگ لائن ناکام دکھائی دی، میزبان ٹیم کی جانب سے 4 کیچ ڈراپ اور ایک رن آؤٹ کا موقع ضائع کرنے کے باوجود قومی ٹیم پہلی اننگز میں زیادہ اسکور نہ بناسکی۔ پاکستان کی اوپننگ جوڑی ایک بار پھر ناکام ہوگئی، 6 رنز کے مجموعی اسکور پر انِ فارم بیٹسمین شان مسعود 2 رنز بنا کر آؤٹ ہوگئے جب کہ اگلی ہی گیند پر فلینڈر نے آؤٹ آف فارم اظہر علی کو چلتا کردیا۔ نائٹ واچ مین محمد عباس اور امام الحق نے اسکور کر 53 تک پہنچایا تاہم اولیوائر نے ایک ہی اوور میں محمد عباس اور اسد شفیق کو پویلین واپس بھیج کر پاکستان کی مشکلات میں اضافہ کردیا۔

امام الحق کی ہمت بھی 43 رنز پر جواب دے گئی جس کے بعد بابراعظم اور کپتان سرفراز احمد نے 70 رنز کی قیمتی شراکت قائم کی اس دوران دونوں بلے بازوں نے تیزرفتاری سے رنز بٹورے تاہم 169 کے مجموعی اسکور پر قومی ٹیم کو اس وقت جھٹکا لگا جب سرفراز احمد 50، بابراعظم 49 اور فہیم اشرف صفر پر پویلین لوٹ گئے۔ شاداب خان 5 اور محمد عامر 10 رنز بناکر آؤٹ ہوئے۔ پروٹیز کی جانب سے اولیوائر نے 5، فلینڈر نے 3 اور رباڈا نے 2 وکٹیں حاصل کیں۔

بعدازاں جنوبی افریقا نے اپنی دوسری اننگز کا آغاز کیا تو ڈین ایلگر 5 کے انفرادی اسکور پر پویلین لوٹ گئے جب کہ ایڈم مرکرم بھی زیادہ دیر وکٹ پر نہ ٹھہر سکے اور 21 رنز بنا کر آؤٹ ہو گئے۔

ڈی بریون 7 اور زبیر حمزہ بغیر کوئی رن بنائے آؤٹ ہوئے جب کہ 93 کے مجموعی اسکور پر باووما بھی 23 رنز بنا کر شاداب خان کا شکار بن گئے۔

5 کھلاڑیوں کے جلد آؤٹ ہونے کے بعد ہاشم آملہ اور کوئنٹن ڈی کوک نے پاکستانی بولرز کا ڈٹ کر مقابلہ کیا اور دوسرے روز کا کھیل ختم ہوا تو ہاشم آملہ 42 اور کوئنٹن ڈی کوک 34 رنز کے ساتھ وکٹ پر موجود تھے۔

گزشتہ روز جنوبی افریقا پہلی اننگز میں ایڈن مارکرم 90 ، ہاشم آملہ 41، بروین 49 اور زوبایر حمزہ کے 41 رنز کی بدولت 262 رنز بنانے میں کامیاب رہی تھی۔ قومی ٹیم کی جانب سے فہیم اشرف نے 3، حسن علی، محمد عباس اور محمد عامر نے 2،2 وکٹیں حاصل کیں تھیں۔

واضح رہے کہ ابتدائی دونوں ٹیسٹ میچوں میں قومی ٹیم کو شکست کا سامنا کرنا پڑا تھا اور یوں جنوبی افریقا کو تین ٹیسٹ میچوں کی سیریز میں 0-2 کی فیصلہ کن برتری حاصل ہے۔



آپ کیلئے تجویز کردہ خبریں‎‎