نواز شریف کے ذاتی معالج نے کیا مشورہ دیا؟

سابق وزیراعظم نواز شریف سے ان کے ذاتی معالج ڈاکٹر عدنان نے کوٹ لکھپت جیل میں ملاقات کی۔


ذرائع کے مطابق ڈاکٹر عدنان نے نواز شریف سے صحت سے متعلق تفصیلی تبادلہ خیال کیا۔

ذرائع کے مطابق نواز شریف نے ذاتی معالج کو بازو میں وقفے وقفے سے درد سے متعلق بتایا،جس پر ڈاکٹر عدنان نے انہیں اسپتال میں داخل ہوکر تفصیلی چیک اپ کرانے کا مشورہ دیا۔

ذرائع کے مطابق نواز شریف نے اسپتال منتقلی کا مشورہ قبول کرنے سے انکار کردیا اور موقف اختیار کیا کہ جو ٹیسٹ کرانے ہیں وہ جیل ہی میں کئے جائیں۔

اس کے بعد جیل ڈاکٹروں نے نواز شریف کو مکمل صحت مند قرار دے دیا۔

جیل ذرائع کے مطابق جیل کے میڈیکل آفیسر ڈاکٹر افسر خان نے اپنی ٹیم کے ہمراہ نواز شریف کا طبی معائنہ کیا۔



آپ کیلئے تجویز کردہ خبریں‎‎

مقبول ٹیگ‎‎‎