نواز شریف کی طبی بنیادوں پر سزا معطلی کی درخواست پر تحریری حکم نامہ جاری

اسلام آباد ہائیکورٹ نے نواز شریف کی طبی بنیادوں پر سزا معطلی کی درخواست پر تحریری حکمنامہ جاری کردیا، میاں صاحب کی تمام میڈیکل رپورٹس نیب کو فراہم کرنے کا حکم دے دیا گیا۔ سابق وزیراعظم کی پرانی سزا معطلی کی درخواست واپس لینے کی متفرق درخواست پیر کو سماعت کیلئے مقررکردی گئی۔


میاں نواز شریف العزیزیہ ریفرنس میں سزا کیخلاف قانونی محاذ پر سرگرم ہیں، مرکزی اپیل کے ساتھ ضمانت کی درخواست کی، پھر طبی بنیادوں پر سزا معطلی کی درخواست اور اب متفرق درخواست بھی دائر کردی گئی۔

نئی درخواست میں پہلی درخواست واپس لینے کی استدعا کی گئی تھی، جس میں مؤقف اختیار کیا کہ صرف طبی بنیادوں پر دائر درخواست کی پیروی کرنا چاہتے ہیں۔

اسلام آباد ہائیکورٹ نے متفرق درخواست سماعت کیلئے مقرر کردی جس پر ڈویژن بینچ 11 فروری کو سماعت کریگا۔

دوسری جانب عدالت عالیہ نے سابق وزیراعظم کی طبی بنیادوں پر سزا معطلی کی درخواست پر تحریری حکمنامہ جاری کردیا، جسٹس عامر فاروق اور جسٹس محسن اختر کیانی نے درخواست پر 6 فروری کو سماعت کی تھی۔

تحریری حکم نامے میں جیل حکام کو ہدایت کی گئی ہے کہ میاں صاحب کی میڈیکل رپورٹس ایڈیشنل پراسیکیوٹر نیب کو فراہم کی جائیں، عدالت نے قرار دیا ہے کہ پنجاب حکومت اگرچہ اس درخواست میں فریق نہیں لیکن چونکہ میڈیکل بورڈز اسی کی سفارشات پر بنے، اس لئے صوبائی حکومت کو بهی نوٹس جاری کئے جارہے ہیں۔



آپ کیلئے تجویز کردہ خبریں‎‎