پنجاب حکومت خلاف کسی بھی سازش کا حصہ نہیں بنیں گے، چوہدری شجاعت

قاف لیگ کے سربراہ چوہدری شجاعت کہتے ہیں کہ وزیر اعلیٰ پنجاب عثمان بزدار کے خلاف کسی بھی سازش میں حصہ دار نہیں بنیں گے، پاکستان تحریک انصاف کے ساتھ ہمارا اتحاد قائم رہے گا ۔


حکومت اور قاف لیگ کے درمیان آج اتوار کو ہونے والی اہم ملاقات کے بعد میڈیا سے بات کرتے ہوئے انہوں نے کہا عمران خان وقت کی اہم ضرورت ہیں، اس وقت کوئی ان کا مقابل نہیں ہے اور وہ ضرور کامیاب ہوں گے۔

قاف لیگ کے سربراہ نے کہا کہ لوگوں کی خواہش ہے کہ حکومت کے کام میں رخنہ اندازی کریں ، لیکن ہم نے عہد کیا ہے کہ ہم حکومت کے ساتھ چلیں گے۔

متعلقہ خبر: اتحادی جماعتوں کو منانے کا مشن ، اہم ملاقات آج ہوگی

انہوں نے کہا افواہیں سرگرم ہیں کہ عثمان بزدار کی حکومت کے خلاف سازشیں ہورہی ہیں، مگر ہم ایسی کسی بھی سازش کا حصہ نہیں بنیں گے۔

چوہدری شجاعت نے قاف لیگ کے کسی بھی رہنماء کی حمزہ شہباز سے ملاقات کی تردید کی، اور کہا ایسی تمام خبریں جھوٹ پر مبنی ہیں۔

سیاسی معاملات پر وزیر اعظم کے مشیر نعیم الحق کہتے ہیں مسلم لیگ قاف کے ساتھ حکومت کا اتحاد قائم رہے گا۔

انہوںنے کہا کہ ہم نے وزیراعظم عمران خان کی ہدایت کی روشی میں ملاقات کی ہے تاکہ ہم دنیا کو بتائیں کہ ہمارا اتحاد مضبوط ہے اور یہ قائم رہے گا۔

وزیراعظم کے مشیر نے کہا کہ قاف لیگ رہنما چوہدری پرویز الٰہی اسپیکر پنجاب اسمبلی کے طور پر ایک اہم کردار نبھا رہے ہیں، جبکہ قاف لیگ کے دو وزراء کابینہ کا بھی حصہ ہیں، اور جب بھی مرکز اور صوبوں کی کابینہ میں توسیع ہوگی، حکومت قاف لیگ سے مزید وزراء لے گی۔

نعیم الحق نے چوہدری شجاعت کی تعریف کرتے ہوئے کہا کہ ان کا سیاست اور حکومت میں تجربے سے ہم سیکھتے رہے ہیں اورمزید بھی سیکھیں گے۔

واضح رہے کہ پاکستان تحریک انصاف کے رہنما نعیم الحق نے وزیراعظم کی ہدایت پر مسلم لیگ ق کے صدر چوہدری شجاعت اور مونس الٰہی سے ان کی رہائش گاہ پر آج ملاقات کی ۔

اسپیکر پنجاب اسمبلی پرویزالہیٰ عمرہ کی ادائیگی کیلئے سعودی عرب میں موجود ہونے کے باعث اس ملاقات میں شریک نہیں ہوئے ۔

طے شدہ معاہدے کے مطابق مسلم لیگ ق کو مرکز میں ابھی ایک وزارت ملنا باقی ہے جبکہ پنجاب میں ق لیگ کو طے شدہ فارمولے کے مطابق وزارتیں دے دی گئی ہیں۔



آپ کیلئے تجویز کردہ خبریں‎‎