رواں سال کسی کو مفت حج نہیں کرایا جائیگا،حج پالیسی کا اعلان

حکومت نے حج پالیسی 2019 کا اعلان کردیا۔ نئی پالیسی کے تحت رواں سال کسی کو مفت حج نہیں کرایا جائے گا۔ حج درخواستیں 25 فروری سے 6 مارچ تک وصول کی جائیں گی۔


وزارت مذہبی امور نے حج پالیسی 2019 کا اعلان کرتے ہوئے کہا ہے کہ رواں سال ایک لاکھ 84 ہزار 210 پاکستانی فریضہ حج ادا کرسکیں گے۔ حج درخواستیں 25 فروری سے 6 مارچ تک وصول کی جائیں گی، جب کہ درخواستوں کی قرعہ اندازی 8 مارچ کو ہوگی۔

وزارت مذہبی امور کا کہنا ہے کہ سرکاری اسکیم کے تحت ایک لاکھ 7 ہزار 526 اور نجی اسکیم کے تحت 71 ہزار 684 عازمین حج کے لیے جائیں گے۔ 5 ہزار کا اضافی کوٹہ نئے رجسٹرڈ آپریٹرز کو دیا جائے گا جبکہ کسی کو مفت حج نہیں کرایا جائے گا۔

حج پالیسی کے مطابق شمالی ریجن کے لیے حج اخراجات بغیر قربانی 4 لاکھ 36 ہزار 975 روپے ہوں گے، جب کہ قربانی کے اخراجات 19 ہزار 451 روپے علیحدہ ہوں گے، تاہم جنوبی ریجن کے لیے حج اخراجات بغیر قربانی 4 لاکھ 26 ہزار 975 روپے ہوں گے۔

واضح رہے کہ نئی حج پالیسی کے مطابق 2014 سے 2018 کے دوران حج کرنے والے حاجی رواں سال دوبارہ حج ادا کرنے کے اہل نہیں ہوں گے، جب کہ عازمین کو پی آئی اے سمیت دیگر ائرلائنز کے ذریعے حجاز مقدس روانہ کیا جائے گا۔



آپ کیلئے تجویز کردہ خبریں‎‎