کارکنان 23 مارچ کو احتجاج نہ کریں، نواز شریف کا جیل سے پیغام

کوٹ لکھپت جیل میں قید سابق وزیراعظم نواز شریف نے کارکنوں کو 23 مارچ کو احتجاج کرنے سے روکتے ہوئے کہا ہے کہ اس اہم دن کو پاکستان کی ترقی اور خوشحالی کی دعا کیساتھ بنائیں۔


نواز شریف نے جیل سے کارکنوں کے نام پیغام جاری کرتے ہوئے کہا ہے کہ کارکن میرا علاج نہ ہونے پر احتجاج کرنا چاہتے ہیں، میں تمام کارکنوں سے اپیل کرتا ہوں کہ صبر کا دامن ہاتھ سے نہ چھوڑیں، 23 مارچ کو اپنے علاقوں میں صرف یوم پاکستان منائیں، میں آپ کی محبت اور جذبے کو سلام کرتا ہوں۔

پیغام میں نوازشریف نے کارکنوں کو مخاطب کرتے ہوئے کہا ہے کہ میں اپنے چاہنے والوں کے جذبے کی بے حد قدر کرتا ہوں، جیل کی کوٹھری میں اللہ رب العزت پر توکل کے بعد آپ کی یہی محبت اور جذبہ مجھے حوصلہ اور تقویت دیتا ہے مگر میں آپ سب سے اپیل کرتا ہوں کہ میری طرح اللہ تعالی کی رحیم ذات پر بھروسہ رکھیں، صبر کا دامن ہاتھ سے نہ چھوڑیں اور کسی بھی طرح کا فیصلہ کرنے سے پہلے پارٹی کی اعلیٰ قیادت کی ہدایات، پارٹی ڈسپلن کا احترام اور پارٹی پلیٹ فارم کا استعمال ضروری ہے۔

سابق وزیراعظم نے کہا کہ مسلم لیگ (ن) ایک ذمہ دار جماعت ہے اور ہم نے ہمیشہ فیصلہ سازی میں ملکی مفاد کو مقدم رکھتے ہوئے سیاسی یا ذاتی مفاد کو پس پشت رکھا اور عجلت سے کام نہیں لیا، اللہ تعالی کے فضل و کرم سے میرے دامن پر کرپشن یا بدعنوانی کا کوئی داغ نہیں۔



آپ کیلئے تجویز کردہ خبریں‎‎

مقبول ٹیگ‎‎‎