ایون فیلڈ ریفرنس میں نواز شریف کیلیے آج بڑا دن

نيب نے سابق وزیراعظم نواز شريف کی سزا معطلی کے خلاف سپريم کورٹ سے رجوع کیا تھا—۔فائل فوٹو


اسلام آباد: ايون فيلڈ ريفرنس میں سابق وزیراعظم نواز شریف کی سزا کالعدم قرار دینے کے اسلام آباد ہائی کورٹ کے فیصلے کے خلاف قومی احتساب بیورو (نیب) کی اپيل پر سپريم کورٹ ميں سماعت آج ہوگی۔

ایون فیلڈ ریفرنس: نواز شریف، مریم اور کیپٹن (ر) صفدر کی سزا معطل، رہائی کا حکم

چيف جسٹس آف پاکستان جسٹس ثاقب نثار کی سربراہی میں سپریم کورٹ کا پانچ رکنی بینچ کیس کی سماعت کرے گا، بینچ کے دیگر ارکان میں جسٹس آصف سعید کھوسہ، جسٹس گلزار، جسٹس مشير عالم اور جسٹس مظہر عالم شامل ہیں۔

یاد رہے کہ احتساب عدالت نے گذشتہ برس 6 جولائی کو نواز شریف کو ایون فیلڈ ریفرنس میں 10 سال قید اور جرمانے کی سزا سنائی تھی، جسے بعدازاں اسلام آباد ہائیکورٹ نے 19 ستمبر کو معطل کرتے ہوئے سابق وزیراعظم کی رہائی کا حکم جاری کیا تھا۔

اسلام آباد ہائیکورٹ کی جانب سے نواز شريف کی سزا معطلی کے خلاف نيب نے سپريم کورٹ سے رجوع کیا تھا۔

گذشتہ سماعت پر چیف جسٹس ثاقب نثار نے اپنے ریمارکس میں اسلام آباد ہائی کورٹ کی جانب سے نواز شریف کی سزا معطلی کے فیصلے کو فقہ قانون کے خلاف قرار دیا تھا۔



آپ کیلئے تجویز کردہ خبریں‎‎