عمران خان نے ہمیں کہیں کا نہیں چھوڑا اب بہت ہو گیا، اب آپ کو مداخلت کرنا پڑے گی، شہباز شریف سے یہ اپیل کس نے کی؟

لاہور: پاکستان مسلم لیگ ن کے رہنما خواجہ سعد رفیق نے وزیراعظم عمران خان کے سامنے ہاتھ کھڑے کر دئیے۔خواجہ سعد رفیق نے شہباز شریف سے مدد مانگ لی۔میڈیا رپورٹس میں بتایا گیا ہے کہ خواجہ سعد رفیق کی پارلیمنٹ ہاؤس میں اپوزیشن لیڈر شہباز شریفسے ملاقات ہوئی۔یہ ملاقات اپوزیشن لیڈر کے چیمبر میں ہوئی۔

 

میڈیا رپورٹس میں بتایا گیا ہے کہ خواجہ سعد رفیق نے شہباز شریف سے نیب مقدمات سے بچنے کے لیے مدد کی اپیل کی۔سعد رفیق نے شہباز شریف کے سامنے بے بسی کا اظہار کرتے ہوئے کہا کہ میاں صاحب اب تو بس ہو گئی ہے آپ مداخلت کریں۔سعد رفیق نے شہابز شریف سے مکالمہ کرتے ہوئے کہا کہ عمران خان نے ہمیں کہیں کا نہیں چھوڑا اب بہت ہو گیا ہے۔

 

جب کہ شہباز شریف نے سعد رفیق کو تسلی دیتے ہوئے کہا کہ جلد حالات بہتر ہو جائیں گے۔

 

سعد رفیق نے کہا کہ مجھے اور میرے خاندان کو جھوٹے نیب کیسز میں بدنام کیا جا رہا ہے اس لیے ہمیں عمران خان کا راستہ روکنے کے لیے کسی حد تک بھی جانا چاہئیے۔جب کہ دوسری جانب لاہور کی احتساب عدالت نے پیراگون ہاﺅسنگ اسکینڈل میں گرفتار مسلم لیگ (ن) کے رہنما اور سابق وفاقی وزیر ریلوے خواجہ سعد رفیق اور ان کے بھائی سلمان رفیق کے جسمانی ریمانڈ میں 7 یوم کی توسیع کی قومی احتساب بیورو (نیب) کی درخواست منظور کرلی ہے. سماعت سے قبل صحافیوں سے گفتگو کرتے ہوئے خواجہ سعد رفیق نے کہا کہ ڈیڑھ ماہ کا عرصہ گزر چکا ہے لیکن نیب ابھی تک شواہد پیش نہیں کرسکا ہے، حکومت کا منی بجٹنان فائلر کے لیے آسانیاں جبکہ فائلرز کے لیے مشکل لے کر آیا ہے. انہوں نے مزید کہا کہ یہ کیسا بجٹ ہے؟ جس میں 50 لاکھ نوکریوں، 50 ہزار گھروں اور زراعت کے شعبے کا ذکر ہی نہیں؟انہوں نے کہا کہ حکمران طبقہ اپنی سہولت کے لیے یہ بجٹ لے کر آیا ہے، اس بجٹ میں بیرون ممالک جائیدادیں رکھنے والوں کو تحفظ فراہم کیا گیا ہے. خواجہ سعد رفیق نے کہا کہ قومی اسمبلی میں احتجاج ہوا تو ان کی صحت پر ناگوار گزر، انہوں نے کہا کہ ملک کی سیاسی صورت اسی وقت صحیح ہوگی جب سب سیاسی جماعتیں مل کر چلیں گی. ریمانڈ میں توسیع کے عدالتی فیصلے کے بعد خواجہ سعد رفیق نے بات چیت کرتے ہوئے کہا کہ جسمانی ریمانڈ غیر قانونی ہے، اس میں کوئی نئی بات نہیں، میں حیران ہوں کس کے کہنے پر ریمانڈ ہورہا ہے اور ساتھ ہی دعویٰ کیا کہ یہ جیلیں ہمیں کمزور نہیں کرسکتی.



آپ کیلئے تجویز کردہ خبریں‎‎