پاکستان پیپلز پارٹی کو بڑا جھٹکا

اسلام آباد: (دنیا نیوز) سپریم کورٹ میں جمع کرائی گئی جے آئی ٹی کی رپورٹ میں اومنی گروپ کے انور مجید اور اے جی مجید کو مرکزی ملزم قرار دیدیا گیا، سندھ کی اہم شخصیت نے اربوں روپے جاری کروائے، حسین لوائی سمیت 30 بینکرز کے نام بھی شامل ہیں۔


تفصیلات کے مطابق منی لانڈرنگ سکینڈل میں جوائنٹ انوسٹی گیشن ٹیم (جے آئی ٹی) نے رپورٹ سپریم کورٹ میں جمع کرا دی ہے جس میں اومنی گروپ کے انور مجید اور اے جی مجید کو مرکزی ملزم قرار دیا گیا ہے، دنیا نیوز ذرائع کے مطابق رپورٹ میں سابق صدر آصف زرداری اور ان کی ہمشیرہ فریال تالپور کا نام بھی شامل ہے۔

جے آئی ٹی رپورٹ میں بیمار صنعتوں کی بحالی کے نام پر اربوں روپے دینے پر سندھ حکومت کی اہم شخصیت کا نام بھی شامل ہیں جبکہ سندھ حکومت کے دو درجن افسران کے نام بھی فہرست کا حصہ ہیں۔



آپ کیلئے تجویز کردہ خبریں‎‎