پیرس مظاہرین کی طرح پیلی جیکٹ والے پاکستان میں بھی سامنے آگے

مظاہرین نے بنیادی تنخواہ کا تین گنا ٹیکنیکل الاؤنس دینے، بنیادی پے اسکیل اپ گریڈ کرنے، سروس اسٹرکچر وضع کرنے کا مطالبہ کردیا— فوٹو: سوشل میڈیا


لاہور میں پنجاب کے مختلف محکموں کے انجینیئرز نے پیرس مظاہرین کی طرز پر پیلی جیکٹ پہن کر احتجاج کیا۔

مظاہرین نے بنیادی تنخواہ کا تین گنا ٹیکنیکل الاؤنس دینے، بنیادی پے اسکیل اپ گریڈ کرنے، سروس اسٹرکچر وضع کرنے کا مطالبہ کردیا۔

پنجاب ایسوسی ایشن آف گورنمنٹ انجینیئرز کا احتجاج 23 ویں روز بھی جاری ہے۔ حکومت اور انجینیئرز کے درمیان مذاکرات بے نتیجہ ختم ہوگئے۔ پولیس نے مظاہرین کو منتشر کرنے کے لیے واٹر کینین طلب کر لی۔ انجینیئروں نے فرانس کے مظاہرین کی طرح پیلی جیکٹس پہن کر ریلی نکالی۔ ریلی انارکلی سے چیئرنگ کراس پہنچی تو انجینیئروں نے پنجاب اسمبلی کے سامنے دھرنا دے دیا ۔

مختلف صوبائی محکموں کے انجینئرز نے فرانس کے مظاہرین کی طرز پرپیلی جیکٹس پہن رکھی تھیں ۔ مظاہرین نے چیئرنگ کراس پرپہنچ کر پنجاب اسمبلی کے سامنے دھرنا دے دیا ہے۔

جیو نیوز سے گفتگو میں پاکستان انجینیئرنگ کونسل کے چیئرمین جاوید قریشی اور دیگر قائدین کا کہنا تھا کا جب تک تنخواہ کا تین گنا ٹیکنیکل الاؤنس ، اسکیل اپ گریڈیشن اور انجینیئرز کا سروس اسٹرکچر وضع نہیں کیا جاتا وہ دھرنا ختم نہیں کریں گے۔

انجینیئرز کی احتجاجی ریلی کے باعث مال روڈ پر ٹریفک کا شدید دباؤ رہا جس سے شہریوں کو مشکلات کا سامنا کرنا پڑا۔



آپ کیلئے تجویز کردہ خبریں‎‎