تاریخ کی مختصر ترین شادی

شادی کسی بھی انسان کی زندگی میں بہت اہمیت رکھتی ہے اور فریقین تمام عمر ایک دوسرے کا ساتھ دینے کا عہد کرتے ہیں لیکن ایک نوبیاہتا جوڑے نے مختصر ترین شادی کرتے ہوئے محض 3 منٹ میں ایک دوسرے سے راہیںجدا کرلیں۔


کویت میں ایک نوبیاہتا جوڑے نے دنیا کی مختصر ترین شادی کی انہونی تاریخ رقم کی جس میں دلہن نے صرف 3 منٹ بعد ہی طلاق لے لی۔

اب سوال یہ ہے کہ آخر ایسا کیا ہوا کہ شادی ٹوٹ ہوگئی، کمرہ عدالت میں شادی کے کنٹریکٹ پر دستخط کے بعد دونوں فریقین کمرہ عدالت سے باہر جارہے تھے کہ دلہن حادثاتی طور پر پھسل گئیں تاہم ان کے دولہا نے ان کی مدد کرنے کی بجائے پھسلنے پر اپنی بیگم کو ’بیوقوف‘ کہا۔

دلہن کے لیے یہ بات ناقابل برداشت ثابت ہوئی اور انہوں نے جج سے فوری طور پران کی شادی ختم کرنے کا کہا، اس طرح یہ جوڑا محض 3 منٹ کے لیے شادی کے بندھن میں بندھا۔

یہ کویت اور شاید دنیا بھر کی تاریخ کی تیز ترین طلاق تھی،اس سے قبل دبئی میں ایک جوڑے نے شادی کے 15 منٹ بعد اپنی راہیں جدا کرلی تھیں۔

اس مختصر ترین طلاق کی خبر سماجی روابط کی ویب سائٹ ٹوئٹر پر بھی وائرل ہوئی جہاں اکثر صارفین نے جج کا وقت ضائئع کرنےپر کپل کا مذاق اڑایا ۔

تاہم بعض افراد نے دلہن کا ساتھ دیتے ہوئے کہا کہ انہوں نے بالکل صحیح فیصلہ کیا۔

ٹوئٹر صارف نے لکھا کہ ’ اگر دولہا شادی کی بالکل ابتدا ہی میں ان کی توہین کررہا ہے تو کون جانتا ہے کہ وہ مستقبل میں کیسا سلوک کرتے ‘۔

ایک اور صارف نے لکھا کہ ’ اگر وہ ابتدا ہی میں ایسا رویہ رکھے تو اسے چھوڑنا ہی بہتر ہے ‘۔

بعض صارفین نے یہ شبہ ظاہر کیا کہ دلہن فوری طلاق کے لیے ایک بہانے کی تلاش میں تھی۔

عرب ٹائمز کے آرٹیکل کے مطابق نوبیاہتا جوڑوں کو ریاست کی جانب سے مالی تعاون فراہم کرنے کی وجہ سے کویت میں طلاق کی شرح میں ریکارڈ اضافہ ہوا ہے۔



آپ کیلئے تجویز کردہ خبریں‎‎