معاشی مستحکم کے حصول کے لیے حکومت کا شاندار اقدام، اہم تجارتی شہر کو ٹیکس فری زون قرار دینے کی منظوری

 پاک چین اقتصادی راہ داری چین کے ون بیلٹ ون روڈ منصوبے کا دل ہے تو گوادر پورٹ پاک چین اقتصادی راہ داری کا دل ہے جسے اب ٹیکس فری زون قرار دینے کی منظوری دے دی گئی ہے۔


ایکسپریس ٹربیون کے مطابق گوادر کو ٹیکس فری زون قرار دینے کی تجویز سینیٹ کی قائمہ کمیٹی برائے بحری امور کی ذیلی کمیٹی نے دی تھی۔

ذیلی کمیٹی کے کنوینیئر سینیٹر کوڈا بابر نے اپنی رپورٹ میں اس کے ساتھ ساتھ دیگر کئی تجاویز بھی پیش کی تھیں جنہیں سینیٹر نزہت صادق کی سربراہی میں قائمہ کمیٹی برائے بحری امور نے منظور کر لیا ہے اور گوادر کو ٹیکس فری زون قرار دینے کے لیے گرین سگنل دے دیا ہے۔

اپنی رپورٹ میں ذیلی کمیٹی نے یہ تجویز بھی دی تھی کہ گوادر میں سرمایہ کاری کرنے والوں کو بھی وہی سہولیات دی جانی چاہئیں جو دیگر سپیشل اکنامک اینڈ ایکسپورٹ پراسیسنگ زونز میں دی جاتی ہیں۔

اس کے علاوہ گوادر میں 300میگاواٹ بجلی کا کول پاور پلانٹ بھی ترجیحی بنیادوں پر تعمیر کرنے کی تجویز دی گئی۔ سینیٹر بابر نے اپنی رپورٹ میں بتایا تھا کہ اس میں شامل تمام تجاویز متعلقہ شراکت داروں کے ساتھ مذاکرات اور ماہی گیروں اور مقامی آبادی کی مشکلات کو مدنظر رکھتے ہوئے دی گئی ہیں۔

اس کے علاوہ اس رپورٹ کی تیار میں بلوچستان اسمبلی کے رکن جمال کلمتی سے بھی مشاورت کی گئی۔



آپ کیلئے تجویز کردہ خبریں‎‎