تحریک انصاف میں شیخ رشید کیخلاف اب تک کی سب سے بڑی بغاوت

 شیخ رشید احمد کو اسپیکر پر حملہ نہیں کر ناچاہیے تھا 


وفاقی وزرا سمیت کئی سینئر رہنماؤں نے مختلف وجوہات کی بنا پر وزیر ریلوے شیخ رشید احمد کو پبلک اکاؤنٹس کمیٹی کا رکن بنانے کی تجویز کی مخالفت کرتے ہوئے کہاہے کہ شیخ رشید احمد کو اسپیکر پر حملہ نہیں کر ناچاہیے تھا 

 ایک سینئر پارٹی رہنما اور وفاقی وزیر نے کہا کہ اسد قیصر پارٹی کے پرانے رکن ہیں اور وہ کسی غیر سے اپنے بارے میں ایسی بات برداشت نہیں کرسکتے۔انہوںنے کہاکہ شیخ رشید کو اسپیکر پر حملہ نہیں کرنا چاہیے تھا، اسد قیصر نے خیبر پختونخوا اسمبلی کے بھی اسپیکر کی حیثیت سے کام کیا ہے اور انہیں معلوم ہے کہ پارلیمنٹ کو کیسے چلانا ہے۔

شیخ رشید کے دعوے کہ اپوزیشن لیڈر کا امتحان لینے کے لیے عمران خان نے ان سے پی اے سی کا رکن بننے کا سوال کیا تھا پر ان کا کہنا تھا کہ شیخ رشید معاملے کو بڑھا چڑھا کر پیش کر رہے ہیں۔

ریاض فتیانہ کا کہنا تھا کہ ایسا لگتا ہے کہ شیخ رشید وزیر اعظم کو معاملے پر گمراہ کر رہے ہیں۔

انہوںنے کہاکہ اگر انہیں پارٹی چیئرمین کی جانب سے ایسے احکامات موصول ہوئے ہوتے تو وہ پارٹی نظم و ضبط کا خیال رکھتے ہوئے فوراً اپنا عہدہ چھوڑ چکے ہوتے۔انہوں نے وزیر اعظم کو تجویز دی کہ معاملے پر پارلیمانی رہنماؤں یا کابینہ اراکین کے ووٹ کے ذریعے رائے لی جائے کہ وہ شیخ رشید کو پی اے سی میں شامل کرنا چاہتے ہیں یا نہیں۔

انہوں نے دعویٰ کیا کہ تحریک انصاف کے زیادہ تر رہنما شیخ رشید کو پبلک اکاؤنٹس کمیٹی میں نہیں دیکھنا چاہتے ہیں کیونکہ ان کا موقف ہے کہ ان کے وہاں ہونے سے کمیٹی کے ساتھ ساتھ ملک میں بھی سیاسی ماحول خراب ہوگا۔



آپ کیلئے تجویز کردہ خبریں‎‎

مقبول ٹیگ‎‎‎