چوہدری برادران بھی نیب کے شکنجے میں آگئے

چیئرمین نیب جسٹس ریٹائرڈ جاوید اقبال کی زیر صدارت ایگزیکٹو بورڈ کا اجلاس ہوا جس دوران چوہدری شجاعت حسین اور چوہدری پرویز الہیٰ سمیت دیگر افراد پر 13 انکوائریاں کرنے کی منظوری دید ی گئی ہے ۔


رہنماء پیپلزپارٹی حناربانی کھراور ن لیگی رہنماء صدیق الفاروق، سمیت دیگر کیخلاف انکوائری شروع کرنے کا فیصلہ بھی کرلیا گیا ہے۔

 

نیب کے اجلاس میں غلام سرورسندھو ، محمد حسین ، منیر جیلانی ، نصرت اللہ ، سابق سیکریٹری لوکل گورنمنٹ کے پی اورنگریب ، اصغر خان ، سابق ایکسیئن ہالہ ڈویژن عاشق علی کیخلاف ریفرنس کی منظوری دیدی گئی ہے ۔

چیئرمین نیب کا کہناتھا کہ بدعنوانی تمام برائیوں کی جڑ ہے ، میگا کرپشن کیسز کو منطقی انجام تک پہنچانا ترجیح ہے

اجلاس میں مختلف کیسز میں تحقیقات اور ریفرنسز دائر کرنے کا جائزہ لیا گیا۔ اجلاس میں نیب نے مختلف سیاسی رہنماوٴں اور افسران کے خلاف 13 انکوائریوں اور 7 کیسز کی تحقیقات کرنے کا فیصلہ کرلیا ہے۔اجلاس میں احتساب عدالت میں تین ریفرنسزبھی دائر کرنے کا فیصلہ کیا گیا ہے۔

اعلامیہ نیب میں بتایا گیا ہے کہ چیئرمین نیب کی زیرصدارت اجلاس میں سربراہ ق لیگ چودھری شجاعت حسین اوراسپیکر پنجاب اسمبلی چودھری پرویز الٰہی کے خلاف تین کیسز میں تحقیقات شروع کرنے کا فیصلہ بھی کیا ہے۔



آپ کیلئے تجویز کردہ خبریں‎‎

مقبول ٹیگ‎‎‎