العزیزیہ اور فلیگ شپ ریفرنس کیس کا فیصلہ آگیا

احتساب عدالت کی جانب سے سابق وزیر اعظم میاں نواز شریف کے خلاف العزیزیہ اسٹیل ملز ریفرنس میں 7سال قید اور جرمانے کی سزا سنا دی گئی جبکہ فلیگ شپ ریفرنس میں انہیں بری کر دیا گیا.


عدالت نے نواز شریف کو 2 کروڑ 50 لاکھ ڈالر جرمانے کی سزا بھی سنائی ہے، جبکہ ان کے صاحبزادوں حسن اور حسین کو مفرور قرار دے دیا گیا ہے.

نیب نے نواز شریف کو کمرۂ عدالت سے حراست میں لے لیا ہے.

احتساب عدالت کے جج کا کہنا تھا کہ العزیزیہ ریفرنس میں نواز شریف کے خلاف کافی ٹھوس ثبوت ہیں جبکہ فلیگ شپ ریفرنس میں ان کے خلاف کیس نہیں بنتا اس لیے انہیں بری کیا گیا ہے.

اس موقع پر عدالت میں سابق وزیر اعظم میاں نواز شریف کے ہمراہ ان کے بھتیجے اور پنجاب اسمبلی میں قائد حزب اختلاف حمزہ شہباز اور دیگر رہنما بھی موجود تھے.



آپ کیلئے تجویز کردہ خبریں‎‎