جیل کی وہ سہولت جو ہر عام قیدی کیلئے ہے لیکن نوازشریف کو نہیں مل سکے گی لیکن کیوں؟

 نوازشریف العزیزیہ ریفرنس میں سات سال قید کی سزا لاہور کی کوٹ لکھپت جیل میں کاٹ رہے ہیں


 

صوبہ پنجاب کی چار بڑی جیلوں میں فیملی ہومز تیار کر لیے گئے ہیں جس میں قیدی تین دن اپنے اہلخانہ کے ساتھ گزار سکیں گے ۔

تفصیلات کے مطابق قیدیوں کیلئے یہ سہولت متعارف کروائے جانے کے بعد اسے بہت زیادہ سراہا جا رہا ہے تاہم یہ سہولت نوازشریف استعمال نہیں کر سکیں گے کیونکہ آئی جی جیل خانہ جات کا کہناہے کہ نوازشریف کی سزا 10 سال سے کم ہے اس لیے انہیں یہ سہولت نہیں مل سکتی ۔ سہولت صرف ان قیدیوں کیلئے میسر ہو گی جن کی قید 10 سال سے زائد ہے ۔

یاد رہے کہ نوازشریف العزیزیہ ریفرنس میں سات سال قید کی سزا لاہور کی کوٹ لکھپت جیل میں کاٹ رہے ہیں تاہم اسلام آباد ہائیکورٹ میں نوازشریف کی جانب سے سزا معطلی کیلئے اپیل دائر کی گئی ہے جس پر سماعت جاری ہے ۔



آپ کیلئے تجویز کردہ خبریں‎‎