فواد چودھری قومی اسمبلی میں بیٹھنے کے اہل نہیں رہے،الیکشن کمیشن نے وزیر اطلاعات کیخلاف سخت ایکشن لے لیا

 الیکشن کمیشن آف پاکستان نے چیف الیکشن کمشنر سردار محمد رضا کی منظوری کے بعد سالانہ گوشوارے نہ جمع کرانے والے 332 ارکان پارلیمنٹ کی رکنیت معطل کر دی ہے۔


وفاقی وزیر اطلاعات قومی اسمبلی میں بیٹھنے کے اہل نہیں رہے. الیکشن کمیشن نے فواد چوہدری سمیت 332 ارکان پارلیمنٹ کی رکنیت معطل کر دی۔

رکنیت معطل ہونے والوں میں وزیر اطلاعات فواد چوہدری، ڈپٹی اسپیکر قاسم سوری، امور کشمیر علی امین گنڈا پور اور وزیر داخلہ شہریار آفریدی شامل ہیں۔

اراکین پارلیمنٹ کے مالی اثاثوں کے گوشواروں کی تفصیلات جمع کرانے والی332 اراکین سینٹ اورقومی وصوبائی اسمبلیوں کی رکنیت معطل کردی، گیارہ سو چوہتر اراکین پارلیمنٹ میں سے آٹھ سو چوہتر نے تفصیلات جمع کرائیں.

 الیکشن کمیشن کے ارکان پارلیمنٹ کی رکنیت معطلی کے نوٹیفکیشن کے مطابق سینٹ کے 104اراکین میں سے 20اراکین نے مالی گوشواروں کی تفصیلات جمع نہ کرائیں.

 قومی اسمبلی کے 342میں سے 72اراکین مالی گوشواروں کی تفصیل جمع نہ کرسکے، حکمران جماعت سے تعلق رکھنے والے وزیر اطلاعات فواد چوہدری ،ڈپٹی سپیکر قاسم سوری کی رکنیت معطل کر دی گئی، رکنیت معطلی کی زد سے وزیرمملکت برائے داخلہ شہریارآفریدی اور وزیرامور کشمیر علی امین گنڈا پور بھی بچ نا سکے.



آپ کیلئے تجویز کردہ خبریں‎‎