پاکستان میں سرمایا کاری کرنے کے لیے ہرممکن مدد کے لیے تیارعمران خان نے ترک تاجروں کوبڑی پیشکش کردی

وزیراعظم عمران خان نے پاک ترک بزنس کونسل میں خطاب کرتے ہوئے کہا ہے کہ ان کی حکومت پاکستان میں کاروبار اور سرمایہ کاری کو منافع بخش بنانے کے حوالے سے پرعزم ہے اور اس سلسلے میں ہرممکن سہولیات فراہم کی جائیں گی۔


سرمایہ کاری کا فروغ ہماری حکومتی پالیسی میں شامل ہے.

وزیراعظم نے کہا کہ 'کرپشن کی وجہ سے سرمایہ کاری میں کمی اور انڈسٹری تباہ ہوتی ہے ، لیکن اب ہم سرمایہ کاروں کو سہولیات فراہم کر رہے ہیں اور ملک میں کاروبار کی لاگت میں کمی لانے کے ساتھ ساتھ اس حوالے سے آسانیاں پیدا کی جارہی ہیں.

 ہمیں یقین ہے کہ سرمایہ کاری سے ملک میں غربت کا خاتمہ ہو گا ، ترک تاجروں کو پاکستان میں سرمایہ کاری میں جو مشکلات ہیں انہں دور کیا جائے گا.

عمران خان نے مزید کہا کہ اب پاکستان میں بلکل نئی حکومت آ چکی ہے جو سرمایہ کاری کا فروغ چاہتی ہے.

غلط پالیسیوں کی وجہ سے ہمارے برآمدات متاثر ہوئیں اور میں ترک سرمایہ کاروں کو یقین دلاتا ہوں کہ آپ کے مسائل حل کیے جائیں گے تاکہ آپ کو کاروبار کرنے میں آسانی ہو.

عمران خان نے یہ بھی کہا کہ موجودہ حکومت  تجارت و سرمایہ کاری کو منافع بخش بنانے کے لئے پرعزم ہے‘ پاکستان اور ترکی کے درمیان تجارتی رکاوٹوں کو دور کرتے ہوئے تجارت کو مزید فروغ دیا جائے گا.

 انہوں نے کہا کہ پاکستان میں سرمایہ کاری اورکاروبار کے بڑے مواقع ہیں۔ پاکستان میں معدنیات اور بالخصوص تیل و گیس کے ذخائر کو بروئے کار لانے کی ضرورت ہے.



آپ کیلئے تجویز کردہ خبریں‎‎