مہنگائی کے مارے عوام پر مزید بوجھ۔۔۔ حکومت عوام پر ایک اور بم گرانے کو تیار

مہنگائی کے مارے عوام پر مزید بوجھ ڈالنے کے لیے حکومت نے ضمنی بجٹ لانے کا فیصلہ کرلیا ہے .


ماہرین کا کہنا ہے کہ عوام میں مزید معاشی بوجھ اٹھانے کی سکت نہیں رہی اس طرح کے اقدامات سے حکومت کے خلاف عوامی تحریک جنم لے سکتی ہے.

دنیا بھر میں حکومتیں عوام میں ضروریات زندگی پر سبسڈی دیتی ہیں جبکہ پاکستان میں حکومتوں نے ضروریات زندگی پر ٹیکسوں کو ہی آمدن کا ذریعہ بنا رکھا ہے.

نجی ٹی وی سے گفتگو کرتے ہوئے وفاقی وزیر خزانہ اسد عمر کا کہنا ہے کہ ضمنی بجٹ سے خسارہ کم کرنے میں مدد ملے گی جبکہ آئی ایم ایف کو چینی قرضوں کی تفصیلات فراہم کردی ہیں.

وزیر خزانہ نےکہا کہ خسارے پر قابو پانے کے لیے ٹیکس نیٹ کو وسیع اور ٹیکس چوری پر قابو پایا جارہا ہے، ضمنی فنانس بل سے مالیاتی خسارہ پچھلے سال سے بہت کم رہے گا، کرنسی کی قدر میں مزید کمی کے بارے میں اسٹیٹ بینک ہی کوئی فیصلہ کرے گا، ایف بی آر کی بہتری کے لیے پالیسی اور ٹیکسوں میں ردوبدل پہلے دن سے جاری ہے. 



آپ کیلئے تجویز کردہ خبریں‎‎