موجودہ حکومت کی عوام دشمن پالیسیاں سن کر۔۔۔ نواز شریف نے حکومت کی بینڈ بجا دی

کوٹ لکھپت جیل میں جمعرات کا دن سابق وزیر اعظم نواز شریف سے ملاقات کادن ہوتا ہے ۔


نواز شریف نے سانحہ ساہیوال پر افسوس کا اظہار کیا۔ انہوں نے کہا تصدیق کئے بنا بیگناہوں کا خون نہیں بہانہ چاہیے تھا، چاہتا ہوں سانحہ ساہیوال کی شفاف تحقیقات ہوں، موجودہ حکومت کی عوام دشمن پالیسیوں کو سن کر افسوس ہوتا ہے۔

نواز شریف کا کہنا ہے عوام کی عدالت میں سرخرو ہوں گے، سی پیک کیلئے سردھڑ کی بازی لگائی

 اگر اسے روکا گیا تو بہت نقصان ہوگا، لاہور سے ملتان موٹروے مکمل ہے مگر افتتاح نہیں کیا جا رہا۔

لیگی رہنماؤں نے سوال کیا کہ میاں صاحب آپکی صحت کیسی ہے؟ انہوں نے کہا صحت بالکل ٹھیک ہے اور حوصلے بلند ہیں۔

نواز شریف کی آج کل طبیعت خرابی کی خبریں گردش کر رہی ہیں ، دو روز قبل ان کے مختلف ٹیسٹ ہوئے جن کی رپورٹ آںے پر ان کے ذاتی معالج نے انہیں غیر تسلی بخش قرار دیا تھا۔

انہوں نے مزید کہا کہ کسی رہنما یا کارکن سے ملاقات کے لیے مجھے کوئی لسٹ دکھائی نہیں جاتی، ملنے کے لیے جو بھی آتا ہے اسے خوش آمدید کہتا ہوں۔



آپ کیلئے تجویز کردہ خبریں‎‎