شہباز شریف کا استعفیٰ۔۔۔مسلم لیگ (ن) نے تحریک انصاف کے آگے شرط رکھ دی

،کاش جتنی تیز حکومتی ترجمانوں کی زبانیں چلتی ہیں، اتنی تیزی سے حکومت بھی چلاسکتے ۔


مسلم لیگ (ن) لاہور صدر و رکن قومی اسمبلی محمد پرویزملک ،جنرل سیکرٹری خواجہ عمران نذیر اور ایڈیشنل سیکرٹری اطلاعات عامر خان نے کہا ہے کہ شہباز شریف سے استعفیٰ مانگنے والے پہلے عمران خان سے استعفیٰ لیں وہ بھی نیب کو مطلوب ہیں.

حکومت کے پاس ملک وقوم کی خدمت کے لئے کوئی منصوبہ ہے اور نہ ہی وژن، کاش جتنی تیزترجمانوں کی زبانیں چلتی ہیں، اتنی تیزی سے حکومت بھی چلاسکتے۔

ان خیالات کا اظہار انہوں نے پارٹی کارکنوں سے گفتگو کرتے ہوئے کیا ۔رہنمائوں نے کہا کہ نیب کو ہیلی کاپٹر اور علیمہ باجی کیس میں عمران خان کو بلانا چاہئے۔

انہوں نے کہا کہ نیب کو عمران کو بھی 120 دن جیل میں رکھنا چاہئے۔  سلیکٹڈ وزیراعظم اپنے کٹھ پتلی ترجمانوں کے ذریعے تین مرتبہ منتخب وزیراعظم کی صحت پر سیاست کررہے ہیں،سلیکٹڈ وزیراعظم کے گمنام ترجمان شاہ سے زیادہ شاہ کے وفادار بننے کی کوشش کر رہے ہیں، حکومت جان چکی ہے نوازشریف کی کے ساتھ کارکردگی کا مقابلہ نہیں ہو سکتا تو حاسد اور نالائق حکومت نے نوازشریف کی صحت پر سیاست شروع کر دی ہے۔مگر نوازشریف کسی قسم کی ڈیل نہیں مانگیں گے۔ انہوں نے کہا کہ سلیکٹڈ وزیر اعظم جب سے آئے ہیں، بدقسمتی سے قوم کو ہر روز ایک بری خبر ہی مل رہی ہے۔ عالمی ادارے نے اعتراف کیا ہے پاکستان کی اقتصادی صورتحال اور داخلی کیفیت ان کی سابقہ توقعات سے بھی بہت بری رہی۔



آپ کیلئے تجویز کردہ خبریں‎‎