پی ٹی آئی حکومت گرنے کے قریب، اہم اتحادی حکومت کا ساتھ چھوڑ کر اپوزیشن سے جا ملے

پی ٹی آئی حکومت کے لیے خطرے کی گھنٹی بھج گیئی پاکستان تحریک انصاف کی حکومت اپنی حکومت کو برقرار 


رکھنے کے لیے مطلوبہ نشستیں کھونے لگی ہے حکومت کے اہم اتحادی اپنی قومی اسمبلی کی تمام نشستوں سمیت اپوزیشن بنچوں میں بیٹھنے والے ہیں اور اگر اپنے ان اتحادیوں کو منانے میں ناکام ہو گیی تو حکومت کو یا تو مخلوط حکومت بنانی ہو گی یا پھر اپوزیشن مل کر حکومت بنا سکتی ہے اور یا پھر عمران خان اسسمبلیاں توڑ کر الیکشن کی طرف جایں گیں

اندرونی ذرائع نے اس بات کی تصدیق کی ہے کے بلوچستان نیشنل پارٹی کے رہنما اختر مینگل کے آصف علی زرداری سے رابطے ہوئے ہیں جس کے نتیجے میں انہوں نے اپوزیشن بنچوں پر بیٹھنے کے سوچ بچار شروع کر دی ہے اور آصف علی زرداری نے دیگر جماعتوں کو بھی ساتھ ملانے کی تگ ودود شروع کر دی ہے

اگر اپوزیشن حکومت گرانے میں کامیاب ہو گیی تو اس کے صدر آصف علی زرداری ہوں گیں شہباز شریف کو وزیر اعظم بنایا جاۓ گا جب کا اختر مینگل کو اہم وفاقی وزارت سونمپی جاۓ گی اور متحدہ قومی موومنٹ کو سندھ اور وفاق میں وزارتیں ملیں گی جس سے ملک میں ایک مخلوط حکومت کی تشکیل کی تیاری ہے

جب کہ مولانا فضل الرحمان پہلے ہی حکومت گرانے میں پیش پیش ہیں



آپ کیلئے تجویز کردہ خبریں‎‎