تحریک انصاف کے رکن اسمبلی کو گرفتار کرلیا گیا

ٹنڈوآدم کی مقامی عدالت نے جعلسازی کے مقدمے میں پاکستان تحریک انصاف (پی ٹی آئی) کے رکن سندھ اسمبلی دیوان سچا نند کو 3 سال قید کی سزا سنادی۔


تفصیلات کے مطابق جوڈیشل مجسٹریٹ ٹنڈوآدم کامران کلہوڑو کی عدالت میں جعلسازی کے مقدمے کی سماعت ہوئی،پی ٹی آئی کے رکن اسمبلی عدالت میں پیش ہوئے،عدالت نے جرم ثابت ہونے پر پی ٹی آئی کے رکن سندھ اسمبلی دیوان سچا نند کو3سال قید کی سزا کا حکم دیدیا،سزاسنائے جانے پر ملزم پی ٹی آئی ایم پی اے دیوان سچانند کو گرفتار کرلیا گیا۔

دیوان سچا نند مخصوص نشست پر پاکستان تحریک انصاف کے اقلیتی رکن سندھ اسمبلی منتخب ہوئے تھے.

دیوان سچانند نے کاروباری لین دین پر سیٹھ ایوب راجپوت نامی ایک شخص کو ایک کروڑ روپے کا چیک دیا تھا، جو باؤنس ہوگیا تھا۔

جس کے بعد سیٹھ ایوب راجپوت نے دیوان سچا نند کے خلاف مقدمہ درج کروایا۔

یہ کیس کافی عرصے تک چلتا رہا جبکہ رکن سندھ اسمبلی اس دوران ضمانت پر رہا رہے۔

جوڈیشل مجسٹریٹ ٹنڈو آدم کامران کلہوڑو کی عدالت میں آج دیوان سچا نند کے خلاف جعلسازی کے مقدمے کی سماعت ہوئی۔

سماعت کے بعد عدالت نے جرم ثابت ہونے پر پی ٹی آئی کے رکن سندھ اسمبلی دیوان سچا نند کو 3 سال قید کی سزا کا حکم سنایا، جس کے بعد ملزم کو عدالت کے احاطے سے گرفتار کرلیا گیا۔

واضح رہے کہ دیوان سچا نند مخصوص نشست پر پاکستان تحریک انصاف کے اقلیتی رکن سندھ اسمبلی منتخب ہوئے تھے۔

گرفتاری کے بعد جیو نیوز سے گفتگو میں دیوان سچا نند نے کہا کہ 'یہ کیس غلط تھا، بہرحال عدالت نےسزا سنائی ہے، لیکن وہ اس کے خلاف اپیل کریں گے'۔



آپ کیلئے تجویز کردہ خبریں‎‎