حکومت کی کام کی نیت ہے نہ ہی قابلیت، چیف جٹس نے حکومت کو کھری کھری سنا دی

سپریم کورٹ میں زیر زمین پانی کے استعمال سے متعلق کیس کی سماعت ہوئی۔


اس موقع پر چیف جسٹس نے سخت ریمارکس دیتے ہوئے کہا کہ حکومت کی کام کی نیت ہے نہ ہی قابلیت ہے۔ پانی کے لیے کئے گئے اقدامات محض دکھاوا ہیں۔ کیا حکومت لوگوں کو پیاسا مارنا چاہتی ہے۔

چیف جسٹس میاں ثاقب نثار نے کہا ہے کہ ملک میں پانی نایاب ہو گیا ہے۔ یہی صورتحال رہی تو پانی سونے کی قیمت پر بھی نہیں ملے گا جبکہ صورتحال سے نمٹنے کے لیے حکومت کی جانب سے کوئی اقدامات نظر نہیں آ رہے۔

 چیف جسٹس نے کہا کہ لاء کمیشن نے پلان بنایا مگر حکومت کی جانب سے اپر عملدرآمد ہوتا نظر نہیں آیا۔ وفاق اورصوبائی حکومتیں دو ہفتوں میں جواب دیں۔



آپ کیلئے تجویز کردہ خبریں‎‎