ہم لیپ ٹاپ تو نہیں دیں گے مگر۔۔حکومت نے نوجوانوں کے دل کی بات کہہ ڈالی

تیس ہزار لیب ٹاپ طالبعلموں کو دینے کے بعد اب کوئی لیب ٹاپ نہیں ملے گا


عمران اسماعیل نے کہا کہ لیپ ٹاپ دینا ہمارا مقصد نہیں ہے ،نوجوانوں کے لئے نوکریوں کی فراہمی ہمارا مقصد ہے پاکستان کے چالیس فیصد نوجوان نوکری کے لئے بیرون ملک جانے کی کوشش کرتے ہیں یوتھ کے لئے رجسٹریشن کارڈز کا اجرا کر رہے ہیں۔

گورنر سندھ عمران اسماعیل نے کہا ہے کہہم نوجوانوں کو لیپ ٹاپ نہیں نوکریاں دینا چاہتے ہیں تاکہ وہ خود لیپ ٹاپ خرید سکیں۔ان خیالات کا اظہار انہوں نے داؤد انجینئرنگ یونیورسٹی میں طالبعلموں میں لیپ ٹاپ کی تقسیم کی تقریب سے بطورمہمان خصوصی خطاب کرتے ہوئے کیا

 انہوں نے تقریب سے خطاب کرتے ہوئے کہا کہ پچھلی حکومت نے خریدے تھے یہ ہم آپ کو دے رہے ہیں۔ابھی جو لیب ٹاپ ہیں انکی تعداد تیس ہزار ہے،تیس ہزار لیب ٹاپ طالبعلموں کو دینے کے بعد اب کوئی لیب ٹاپ نہیں ملے گا

انہوں نے کہا کہ ہم یوتھ کے لئے ایک اچھا پروگرام کرر ہے جو عثمان ڈار ہیڈ کر ہے ہم چاہتے ہیں کہ آپ کو خود لیپ ٹاپ خریدنے کے قابل بنائیں یوتھ انڈیکس کا ادارہ قائم کیا جو یوتھ کے مسائل کی نشاندہی کریگاوزیر اعظم نے ایک کروڑ نوکری کا وعدہ یوتھ کے لئے کیاہے تاکہ جب نوجوان تعلیم مکلمل کرکے فارغ ہوں تو انکے لئے نوکریاں ہوں بعدازاں میڈیا سے گفتگو کے دوران گورنر سندھ نے کہا کہ میں سندھ میں وفاق کا ہی نمائندہ ہوں سندھ اسمبلی سے آنے والے بل پر اعتراض میرا حق ہے ،اس پر مرتضی وہاب کو اعتراض نہیں ہونا چاہئے مرتضی وہاب سمیت کسی کو اعتراض ہے تو میرے دروازے کھلے ہیں۔



آپ کیلئے تجویز کردہ خبریں‎‎