میوہ جات کی رنگ برنگی دنیا: مختلف ممالک میں کون کون سے ڈرائی فروٹ پسند کیے جاتے ہیں؟

زمانہ قدیم میں جب آئس کریم، چپس اور سوفٹ ڈرنکس، جنھیں عرف عام میں ’سنیکس‘ کہتے ہیں،کا وجود نہیں تھا تو ان کی جگہ ’ڈرائی فروٹ‘ یعنی میوہ جات استعمال کیے جاتے تھے۔ لیکن اس کا ہرگز یہ مطلب نہیں کہ آج کے سنیکس نے میوہ جات کو مکمل طور پر دیوار کے ساتھ لگا دیا ہے۔


میوہ جات کے شوقین پوری دنیا میں ہیں، ساتھ ساتھ ٹھنڈے علاقوں میں رہنے والوں کے لیے یہ زندگی کی لوازمات میں سے ہیں۔ یہ نہ صرف خوش ذائقہ اور صحت کے لیے مفید ہیں، بلکہ جسم کا درجہ حرارت بھی بڑھاتے ہیں۔ میوہ جات کا ایک سب سے بڑا فائدہ یہ ہے کہ یہ باقی غذا کی طرح جلدی خراب نہیں ہوتے اور ذخیرہ کرنے کے کام بھی آتے ہیں۔

ان خصوصیات کی وجہ سے دنیا کے تقریباً ہر ملک میں میوہ جات کے خوبصورت اور پررونق بازار پائے جاتے ہیں۔ آئیے ہم آپ کو ان میں سے کچھ بازاروں کی سیر کرواتے ہیں۔

یہ منظر یقیناً آپ کے لیے جانا پہچانا ہو گا۔ یہ پاکستان کے شہر لاہور کے سٹال کی تصویر ہے۔ یہاں آپ کو روایتی خشک کھوپرا اور چھوہارے بوریوں میں رکھے ہوئے دیکھے جا سکتے ہیں۔

جورجیا کے دارلحکومت تبلیسی میں یہ دکاندار اپنی خوبصورتی سے سجی دکان کے سامنے کھڑا ہے اور گری دار میوہ جات کے علاوہ علاقے کی روایتی ساسج سائز کینڈی اس کی دکان کو مزید چار چاند لگا رہی ہے۔

انڈیا کے میوہ جات کے بازار پاکستان سے زیادہ مختلف نہیں۔ یہاں بھی اخروٹ، کاجو، چھوہارے اور کشمش مقبول ہیں۔

قدیم شہر اصفہان کے بازار میں میوہ جات کے اس سٹال پر ایران میں پیدا کی گئی تازہ انجیر دیکھی جاسکتی ہے جو کہ پوری دنیا میں مقبول ہے۔

یمن کے شہر ثنا میں اس میوہ فروش کی دکان اس لیے منفرد ہے کہ یہ نہ صرف کشمش کی مختلف اقسام بیچ رہا ہے بلکہ ساتھ چاکلیٹ بھی فروخت کر رہا ہے۔

افغانستان کی اس تصویر میں دیکھا جاسکتا ہے کے اس سٹال پر گری دار میوں سے زیادہ سوکھے ہوئے پھل مقبول ہیں۔

مغربی افریقا کے ملک مراکش کی اس دکان پر جتنی بیش بہا کھجوروں کی اقسام دیکھی جاسکتی ہیں اتنی تعداد میں کم ہی جگھوں میں پائی جاتی ہیں۔

سنگاپور میں سورج مکھی کے بیج اور مونگ پھلی بے حد پسند کی جاتی ہے اور اس بازار میں انھی پر خاص سیل لگی ہوئی ہے۔

دوشنبے، جو کہ تاجکستان کا مشہور شہر ہے، کے بازار میں رنگ برنگے میوہ جات کے تھال سجے ہوئے ہیں جبکہ معمول کے مطابق گاہک اور دکاندار خرید و فروخت میں مصروف ہیں۔

استنبول کے سپائس بازار میں انجیر، شہتوت، خشک ٹماٹر، شہتوت اور رنگ برنگے میوہ جات سے مزین دکان جس کے دلکش مناظر اور خوشبو گاہکوں کو کھینچ کر اپنی طرف لے آتی ہے۔

عراق کے شہر کردستان کی ایک پنساری کی دکان جس میں سورج مکھی کے بیچ اور پستہ و بادام کی بیش بہا اقسام بیچنے کے لیے مزین کی ہوئی ہیں۔



آپ کیلئے تجویز کردہ خبریں‎‎